ایمرجنسی میں ڈاکٹرز نہیں، مریض تڑپتے رہے، سول ہسپتال خیرپور

خیرپور کے سول ہسپتال میں شعبہ ایمرجنسی میں مریض تڑپتے رہے. ایمرجنسی میں کوئی ڈاکٹر موجود نہیں. مریض تشویشناک حالت میں گھنٹوں انتظار کرتے رہے مگر کوئی ان کو دیکھنے والا نہیں
برسوں سے سندھ کی عوام بنیادی سہولتوں سے محروم ہیں. ان کے ساتھ صرف جھوٹے وعدے کئے جاتے ہیں. یہ صرف خیرپور کی نہیں بلکہ سندھ کے تمام شہروں کے سرکاری ہسپتالوں میں یہی صورتحال ہے. ہسپتالوں میں مریضوں کو ٹوکن لینے کے لئے صبح سے شام تک لمبی قطاروں میں لگنا پڑھتا ہے. نہ اچھے ہسپتال ہیں نہ ہی دیگر سہولیات.
آخر کب تک سندھ کی عوام پر ظلم کیا جائے گا؟ کب ان کو انسان سمجھا جائے گا. کب سندھ کے حکمران جاگیں گے اور عوام کو انسان سمجھیں گے. وزیرِ صحت عزرہ پیچوہو سے گرازش ہے کہ اس بات کا نوٹس لیں اورصحت کا بجٹ سندھ کی عوام پر خرچ کریں.

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

WhatsApp WhatsApp us