ٹریفک پولیس پر ظلم کی انتہاء

ٹریفک پولیس اہلکاروں کی آئی جی سندھ کلیم امام سے اپیل کہ سندھ سے بلائے گئے ٹریفک پولیس اہلکاروں پہ تھوڑا غور کریں۔

3 سال ہو گئے ابھی تک کوئی فیسیلٹیز نہیں دی گئیں۔ پولیس اہلکاروں کا کہنا ہے کہ ہمیں رہائش دی جائے۔ رینٹ پہ بغیر فیملی کے گھر نہیں مل رہے۔ اگر مل بھی رہے ہیں تو مالک مکان دو سے تین ہفتے کے بعد خالی کرنے کا بولتے ہیں۔

پولیس اہلکاروں کا کہنا ہے ہمیں سرکاری گھروں میں رہائش دی جائے تاکے ہم اپنی سیلری سے اپنا گزارا بھی کر سکیں اور گھر کا خرچہ بھی چلا سکیں۔ فیسیلٹیز نہیں دے سکتے تو ہمیں اپنے علاقوں میں واپس بھیج دیا جائے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

WhatsApp WhatsApp us