ڈاؤ میڈیکل ہسپتال میں تصادم

ڈاؤ میڈیکل ہسپتال میں مریضوں کے اہلِ خانہ اور ڈاکٹرز کی بیچ میں ہنگامہ آئی۔ مریض کے اہل خانہ کی جانب سے ہسپتال کے ڈاکٹرز پر الزام لگایا گیا کہ انہوں نے مریض کا غلط ٹیسٹ کیا اور اس کے بعد زبردستی متاثرہ مریض کے غیر ضروری آپریشنز کرنے لگے۔ مریض کے اہلِ خانہ نے ہسپتال انتظامیہ پر یہ الزام لگایا ہے کہ یہ ان کے عوام کو لوٹنے کے ہتھکنڈے ہیں۔

اہلِ خانہ کی گذارش پر ان کو آپریشن روم میں اندر جانے نہیں دیا گیا جس پر وہاں موجود سیکیورٹی گارڈز اور لوگوں میں مار پیٹ کا سلسلہ شروع ہوگیا۔ ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ گاڈز کی ایک بڑی تعداد روم کے باہر موجود ہے۔ مریض کے اہلِ خانہ کا یہ الزام ہے کہ گارڈز نے مردوں کے ساتھ ساتھ خواتین پر بھی تشدد اور ہراساں کیا ہے۔ 

یہ ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی۔ ہسپتال کی جانب سے اس واقعے کے بعد اب تک کوئی وضاحت پیش نہیں کی گئی۔ 

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

WhatsApp WhatsApp us