جمعرات بازار میں نازیبا حرکتیں، عمر رسیدہ عورت بھی متاثر

پاکستان میں عورتوں کو ہراساں کرنا ایک عام سی بات ہے۔ نہ عورتیں سڑکوں پر محفوظ ہیں نہ یی بازاروں میں۔ ایسے مردوں کا بازاروں میں جانے کا مقصد ہی خواتین کو چھیڑنا ہوتا ہے وہ اپنی حوس میں بازار جاتے ہیں اور خواتین کو نشانہ بناتے ہیں۔

کراچی میں جمعرات بازار میں عورتوں کو ہراساں کرنا اور ان کے ساتھ نا زیبا حرکتیں کرنا معمول بن گیا ہے۔ بازاروں میں صرف جوان لڑکیوں کو ہی نہیں بلکہ عمر رسیدہ عورتوں کو بھی اپنی حوس اور گندی حرکتوں کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔

بازاروں میں اس طرح کے مردوں کو پکڑے جانے پر خوب ذلیل کیا جاتا ہے مگر اس کے باوجود وہ اس گھٹیا عمل کو نہیں روکتے۔ ان کے دماغ گندگی کی اس حد تک جا پہنچی ہے جہاں نہ ان کو ماں کی عمر کی عورت کا لحاظ ہے اور نہ ہی محصوم بچیوں کا۔

ملک میں اس قسم کے واقعات تب تک پیش آتے رہیں گے جب تک قانون کی پکڑ مضبوط نہیں ہوگی۔ آخر اس ملک میں قانون کب سخت ہوگا؟ آخر کب اس طرح کے گھٹیا مردوں کو سزائیں ہونگی

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

WhatsApp WhatsApp us