غربت نے ایک باپ کو قاتل بنا دیا

کراچی کے علاقے شادمان ٹاؤن کے ڈی اے اپارٹمنٹس میں باپ اور بیٹی کی لاشیں بر آمد ہوئی۔ رپورٹ کے مطابق فلیٹ میں کاشف اپنی اہلیہ اور دو بچوں کےساتھ رہائش پذیر تھا، کاشف نےچھت سےکود کرخودکشی کی، واقعے سے چند منٹ پہلے رشتہ داروں کو فون کرکے اطلاع بھی دی۔ فلیٹ سے کاشف کی بیٹی کی لاش جبکہ بیوی اور بیٹا زخمی حالت میں ملے۔ 

عمارت کے مکینوں کے مطابق کاشف نے موبائل فون مانگا اور بتایا کہ اس کے بچے فلیٹ میں لاک ہوگئے ہیں، جس کے تھوڑی ہی دیر بعد کاشف نے عمارت کی چھت سے کود کر خودکشی کرلی، فلیٹ سے اُس کی اہلیہ 35 سالہ صوفیہ اور 10 سالہ بیٹا ایان شدید زخمی حالت میں ملے جبکہ 8 سالہ بیٹی زینب مردہ حالت میں تھی۔

پولیس کے مطابق کاشف عمارت کی چھت سے گرا ہے۔ گھر سے ممکنہ طور پر واردات میں استعمال ہونے والا ہتھوڑا اور پنکھا ملا ہے، پولیس کی فارنزک ٹیم نے فلیٹ سے شواہد اکٹھا کرکے فلیٹ کو مکمل سیل کردیا ہے۔

ایس پی گلبرگ ایاز عمرانی کا کہنا ہے کہ واقعے میں کاشف خود ملوث ہے یا کوئی اور ابھی کچھ بھی کہنا قبل از وقت ہوگا جبکہ زخمیوں کا بیان بھی اس حوالے سے اہمیت کا حامل ہے۔

 

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

WhatsApp WhatsApp us