کرپٹ افسران نے پونے 2 ارب روپے ہضم کرلیے

سندھ میں کرپشن کا ایک اور اسکینڈل سامنے آگیا،تنخواہوں اور الاؤنسز کے جعلی بلز بنا کر قومی خزانے کو پونے دو ارب روپے کا چونا لگانے والوں کے خلاف گھیرا تنگ کر دیا گیا ہے۔پاکستان پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین اور ملک کے سابق صدر آصف علی زرداری کے آبائی علاقے شہید بے نظیر آباد کے محکمہ تعلیم اور دیگر محکموں کے اعلی افسران نے محکمہ خزانہ کے حکام کی ملی بھگت اور جعلسازی کے زریعے جعلی ملازمین کے نام پر تنخواہوں اور دیگر اضافی الاؤنسز کے نام پر بل پاس کروائے گئے ہیں نیب سکھر نے سیکریٹری خزانہ سندھ کو لیٹر ارسال کر دیا ہے اس جعلسازی میں ملوث گروہ کے اعلی افسران کو سندھ کی حکمراں جماعت کی بڑی شخصیات کی مکمل طور پر پشت پناہی حاصل ہے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

WhatsApp WhatsApp us