چیف جسٹس کے تیزابی ریمارکس

اسلام آباد سپریم کورٹ نے جمعرات کے روز تیزاب گردی کیس میں ملزم کی بریت کی درخواست کو مسترد کردیا۔

چیف جسٹس کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے متاثرہ خاتون کے موکل کو معاف کرنے کے باوجود سزا برقراررکھی۔

جسٹس آصف سعید کھوسہ نے کہا کہ تیزاب گردی ریاست کیخلاف بڑاجرم ہے، جو قتل سے بھی زیادہ سنگین ہے، متاثرہ خاتون بے شک معاف کرے، قانون تیزاب گردی کے ملزم کو معاف نہیں کر سکتا، تیزاب پھینکنے کے کیس میں کوئی سمجھوتانہیں ہوسکتا۔

آصف سعید کھوسہ نے مزید کہا کہ تیزاب گردی کے مجرم کسی رعایت کے مستحق نہیں، تیزاب گردی سے متعلق قانون انتہائی سخت ہے، کسی پرتیزاب پھینکنے کی سزا عمر قید ہے۔ 

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

WhatsApp WhatsApp us