عوام نے سیاستدان کو مسجد سے نکال دیا

سیاستدان کوئی بڑے سے بڑا واقعہ پیش آجائے۔ اپنی سیاست چمکانے لواحقین کے پاس پہنچ جاتے ہیں۔ اسی طرح پی ٹی آئی کے ایک سینیئر رہنما بھی سانحہ تیزگام کے لواحقین سے تعزیت کرنے پہنچے۔

سندھ اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر اور تحریک انصاف کے رہنما فردوس شمیم نقوی کو مشتعل شہریوں نے دھکے دے کر مسجد سے باہر نکال دیا۔ پی ٹی آئی رہنما تیز گام حادثے میں جاںبحق افراد کے لواحقین سے تعزیت کے لیےمیر پور خاص کی غریب آباد مسجد پہنچے۔ جہاں انہوں نے کہا کہ یہ واقعہ جہالت کے باعث پیش آیا۔ جس پر متاثرہ خاندانوں کے افراد مشتعل ہوگئے۔ انہوں نے فردوس شمیم نقوی کو دھکے دے کر مسجد سے نکال دیا۔ مسجد کے باہر احتجاج شروع ہونے پر فردوس شمیم نقوی گاڑی میں بیٹھ کر چلتے بنے۔ بعد ازاں فردوس شمیم نقوی نے  سانحہ تیزگام میں جاں بحق افراد کے لواحقین سے معذرت کرلی۔

فردوس شمیم نقوی نے کہا کہ مجھے سلنڈر کے معاملے پر بہتر الفاظ استعمال کرنے چاہیےتھے۔ میں نے صرف معاشرے میں خرابی کا ذکر کیا تاہم میرے بیان سے کسی کی دل آزاری ہوئی تو معافی چاہتا ہوں۔

 

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

WhatsApp WhatsApp us