پولیس اہلکاروں کے لیے خصوصی قید خانے

وی آئی پی پروٹوکول اب صرف بڑے چوروں ( نواز شریف، آصف علی زرداری، انور مجید) کو ہی نہیں بلکہ چھوٹے چوروں کو بھی ملا کریں گی۔

شیر شاہ انویسٹی گیشن پولیس نے جعلسازی کے مقدمے میں نامزد پولیس اہلکار شاہد خان کو گرفتار کرلیا ہے۔ جو کرائم برانچ میں تعینات تھا۔ ملزم شاہد خان نے سخاوت نامی شہری سے بلڈنگ کے عوض ایک کروڑ 35 لاکھ روپے لیے۔ پیسے لینے کے بعد نہ عمارت دی اور نہ ہی اسکے کاغذات دیے۔

پولیس کے مطابق ملزم شاہد خان مکانات فروخت کرنے کے بہانے شہریوں سے رقم لینے کے بعد فراڈ کرتا تھا۔ شہریوں کی جانب سے رقم مانگنے پر انہیں پولیس سے ڈراتا تھا۔ مذکورہ اہلکار ماضی میں بھی اپنی جرائم پیشہ سرگرمیوں پر معطل ہوچکا ہے۔ جبکہ اینٹی نارکوٹکس فورس کی جانب سے 3 مقدمات کے چالان میں بھی اس کا نام آچکا ہے۔

شہریوں سے جعلسازی کرکے کروڑوں روپے بٹورنے والا برطرف پولیس اہلکار گرفتار ہوکر بھی گرفتار نہیں ہے۔ پولیس کی جانب سے شاہد کو رشوت کے عوض تھانے میں وی آئی پی سہولیات مہیا کی جارہی ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

WhatsApp WhatsApp us