“ایل پی جی” کی ہڑتال چوتھے روز بھی جاری

ایل پی جی حکام کی جانب سے کی جانے والی ہڑتال دوسرے جاری ہے۔ کئی دکانیں اور ایل پی جی پلانٹ مکمل طور پر بند کردیے گئےہیں۔

واضح رہے کہ ایل پی جی ڈسٹری بیوٹرز ایسوسی ایشن نے کراچی میں ایل پی جی کی دوکانوں سے پولیس کے مبینہ بھتہ وصولی اور کاروبار میں مداخلت کے خلاف 19جولائی کو شہر میں غیر معینہ مدت کی ہڑتال کا اعلان کیا تھا۔

گزشتہ ہفتہ میں کراچی پریس کلب کے باہر ایکشن کمیٹی کے چیئرمین ملک تیمور اعوان اور سکیب وارث، ناصر عباسی، ساجد حسین اور دیگر نے مظاہرہ کیا اور پریس کانفرنس کی جس میں کہا گیا کہ کراچی میں ایل پی جی کی دکانوں سے پولیس کی مبینہ بھتہ خوری اور کاروبار میں مداخلت کے خلاف بطور احتجاج 14 پلانٹس 19 جولائی سے غیر معینہ مدت کیلئے بند رہیں گے۔

کراچی میں پولیس حکام نے قائمقام کمشنر احمد علی قریشی کے احکامات کو بھی ہوا میں اڑا دیا اور شہر بھر میں ایل پی جی کے کاروبار سے وابستہ افراد کو ناحق تنگ کیا جارہا ہے، کراچی پولیس نے گزشتہ دس روز سے بلاجواز ایل پی جی سیلز پوائنٹس کے خلاف کریک ڈاؤن شروع کررکھا ، کمشنر کراچی سے مذاکرات میں ایل پی جی کا کاروبار کرنے والے افراد کے خلاف کریک ڈاؤن نہ کرنے کی یقین دہانی کرائی گئی تھی، تاہم پولیس حکام کی جانب سے ان ہدایات پر عملدر آمد نہیں کیا گیا، ایکشن کمیٹی کے چیئرمین ملک تیمورکا کہنا تھا آئی جی سندھ فوری طور پر اس صورتحال کا نوٹس لیں بصورت دیگر 19جولائی سے شہر بھر میں ایل پی جی کی ترسیل روک دی جائیگی اور اگر ہمارے مطالبات تسلیم نہ کئے گئے تو اس ہڑتال کا دائرہ کار بڑھایا بھی جاسکتا ہے اور ملک بھر میں ہڑتال کی کال دے سکتے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

WhatsApp WhatsApp us