منشیات کی خرید و فروخت

 

سندھ میں ضلع سانگھڑ کے بڑے شہر ٹنڈوآدم میں منشیات اور شراب کا کاروبار ایک بار پھر اپنے عروج پرجاپہنچا ، شہر میں سماجی برائیاں بھی عروج پر ہیں۔ آکڑا پرچی، گٹکا، ماوا، سفینہ، جوا کھلے عام جاری ہیں۔ ایس ایس پی سانگھڑ کی عدم دلچسپی کی وجہ سے سماج دشمن عناصر بے خوف وخطر اپنے مذموم مقاصد کو پورا کرنے میں کافی حد تک کامیابی حاصل کرچکے ہیں۔ شہر میں جگہ جگہ قائم شراب کے اڈوں پر غیر مسلموں کی بجائے مسلمان خریداروں کی تعداد90فیصد ہے ۔ یہی نہیں شہر میں منشیات اور چرس کے اڈوں کی تعداد بھی بڑھتی جارہی ہیں جس نے مختلف علاقوں احمد آباد، بنگلہ روڈ،جوہر آباد، سکندرآباد، ٹنڈولہیار روڈ، جوہر آباد پھاٹک، بیرانی پھاٹک، کھنڈوروڈ، جمن شاہ، رشید کالونی۔ اسٹیشن روڈ حیدرآباد روڈ سٹی تھانے  ڈی ایس پی آفس سے متصل محمدی چوک، چھتری چوک، محلہ الہیارگوٹھ، نیوسٹی، حیدرشاہ روڈ سمیت دیگرعلاقوں کو اپنی لپیٹ میں لے لیا ہے۔

شراب کے نشے میں نوجوان ساری ساری رات آوارہ گرد ی کرتے نظر آتے ہیں جبکہ بعض اوقات دنگا فساد کرتے نظر آتے ہیں منشیات کا گڑھ کہلائے جانے والے علاقوں سےعلاقہ مکینوں نے نقل مکانی شروع کردی ہے اور اپنے مکان سستے داموں بیچ کر دوسرے علاقوں میں کرائے کے مکان میں رہنے پر مجبور ہوگئے ہیں۔ شہر کی سماجی تنظیموں اور سول سوسائٹی کی جانب سے متعدد مرتبہ شکایات کے باوجود پولیس و شہری انتظامیہ کارروائیوں سے گریزاں ہے۔سماج دشمن عناصر دھڑلے سے اپنا منشیات اور شراب کا کاروبار جاری رکھے ہوئے ہیں، جبکہ ایس ایس پی سانگھڑ کی عدم دلچسپی کی وجہ سے ٹنڈوآدم پولیس کسی بھی قسم کے عملی اقدامات کرنے سے قاصر ہے ۔یہ ہے پاکستان کا اصل چہرہ جہاں جگہ جگہ دو نمبری کام ہوتے دیکھائی دیتے ہیں ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

WhatsApp WhatsApp us